1

بالی ووڈ کی 2017 کی وہ فلمیں جس سے کروڑوں روپے ڈوب گئے


سجادالحسن شعورنیوزلاہور: سال 2017 بالی ووڈ کی کچھ فلموں کے لئے اچھا نہیں کیونکہ بڑے ناموں اور بینرز والی فلمیں جن سے سب توقعات لگائے بیٹھے تھے باکس آفس پر کمال دکھانے میں ناکام رہیں۔ سال 2017 میں کچھ فلمیں تو ریلیز ہوتے ہی شائقین کے دل اور سینما کے پردے سے اتر گئیں تھیں جبکہ کنگ خان شاہ رخ اور دبنگ خان سلمان جیسے میگا اسٹارز کی فلموں کا چرچا پورے سال رہا لیکن ان کی یہ فلمیں اپنا لاگت بھی مشکل سے پوری کر سکیں۔ بزنس ٹو ڈے کی رپورٹ کے مطابق اس سال ودیا بالن، امیتابھ بچن، سلمان خان، رنبیر کپور، کترینہ کیف، فرحان اختر، شاہ رخ خان اور کنگنا کی دو، دو فلمیں ریلیز ہوئیں لیکن کوئی ایک بھی فلم بلاک بسٹر ثابت نہیں ہوئی۔ جب ہیری میٹ سیجل شاہ رخ خان اور انوشکا کی اس فلم کو سال کی سب سے بڑی مایوس کن فلم کہا جائے تو غلط نہ ہو گا۔’ جب ہیری میٹ سیجل‘ شاہ رخ خان کی سب سے ’لو اوپننگ‘ ثابت ہوئی۔ بڑا بجٹ اور اسٹار کاسٹ بھی شائقین کو سینما گھروں تک لانے میں ناکام رہے۔کمزور کہانی، بے ربط سیچوئیشنز اور روایتی کیرزما کی غیرموجودگی نے فلم کی ناکامی میں کردار ادا کیا۔ شاہ رخ خان کو بزنس نہ کرنے کی وجہ سے الٹا ڈسٹری بیوٹرز کو پیسے دینے پڑئے۔ سرکار 3 سیاسی تھرلر سیریز کی تیسری فلم ’سرکار 3‘ بھی باکس آفس پر کوئی کارنامہ نہیں دکھا سکی۔ امیتابھ بچن کی یہ فلم دنیا بھر میں صرف 12 کروڑ کا ہی بزنس کر سکی۔ ناقدین اور شائقین دونوں نے’ سرکار 3‘ میں ناقص اداکاری کو فلم کے فلاپ ہونے کی بڑی وجہ قرار دیا۔ جگا جاسوس رنبیر کپور، کترینہ کیف کی جگا جاسوس کو انو راگ باسو نے 131 کروڑ روپے کے بجٹ سے بنایا تھا لیکن فلم محض 83 کروڑ روپے کما سکی۔ کم تر اداکاری، ڈائیلاگز کی ناقص ادائیگی اور مجموعی طور پر غیر متاثر کن تاثر کی وجہ سے رنبیر کپور اور کترینہ کیف بھی ’جگا جاسوس‘ کو ڈوبنے سے بچا نہ سکے۔ بیگم جان سرجیت مکھرجی کی فلم ’بیگم جان‘ سے شائقین وہی امیدیں لگائے بیٹھے تھے جو ودیا بالن کی’ ڈرٹی پکچرز‘سے تھیں اور پوری ہوئی تھیں لیکن اس بار ایسا نہ ہو سکا۔ ’بیگم جان‘ کا ٹریلر ریلیز ہوا تو سب نے تعریف کی لیکن فلم اپنا اثر دکھانے میں ناکام رہی۔ تقریباً 19 کروڑ کے بجٹ سے بنی ’بیگم جان‘ کی مجموعی کمائی 20 کروڑ سے آگے نا بڑھ سکی۔ نور پاکستانی رائٹر صبا امتیاز کے ناول ’کراچی یو آر کلنگ می‘ پربنائی گئی فلم ’نور‘ سے توقع تھی کہ یہ ہلکی پھلکی کامیڈی اور ڈرامے سے سجی ہ وگی جسے دیکھنے والے پسند کریں گے لیکن یہ فلم بھی توقعات پر پوری نہ اترسکی۔ تقریباً 24 کروڑ روپے کے بجٹ سے بنی ’نور‘ کابزنس صرف 11 کروڑ رہا۔ فلم میں مرکزی کردار سونا کشی سنہا نے ادا کیا تھا۔ رنگون وشال بھردواج کے نام کے ساتھ ’حیدر‘، مقبول‘ اور بہت سی دوسری ہٹ فلمیں جڑی ہیں لیکن شاہد کپور، سیف علی خان اور کنگنا کی ’رنگون‘ اس فہرست میں شامل نہ ہو سکی۔ ۔’رنگون‘ 80 کروڑ کے بڑے بجٹ والی فلم تھی لیکن کمائی کے خانے میں صرف 41 کروڑ ہی درج کرا سکی۔ حسینہ پاریکر حسینہ پاریکر میں شردھا کپور نے انڈر ورلڈ ڈان داؤد ابراہیم کی بہن کا رول نبھایا اور اسی وجہ سے فلم خبروں میں ’ان‘ بھی رہی لیکن فلم کا انجام فلم سے جڑے لوگوں کے لئے بھیانک خواب سے کم ثابت نہیں ہوا۔ فلم’ حسینہ پاریکر‘ کب سینما گھروں میں لگی اور کب اتر گئی کسی نے نوٹس ہی نہیں لیا۔ فلم 12 کروڑ کا ہی بزنس کر سکی۔ لکھنو سینٹرل فرحان اختر کی یہ فلم 30 کروڑ روپے میں بنی اور باکس آفس پر کمائی بھی 30 کروڑ ہی رہی۔ فلم کی کاسٹ میں ڈیانا پینٹی اور دپیک دوبریال شامل تھے۔ رابطہ سشانت سنگھ راجپوت، کیرتی اور جم سربھ کی کاسٹ پر مشتمل فلم ’رابطہ‘ کا بھی فلمی شائقین نے نوٹس نہیں لیا اور فلم مکمل طور پر ناکام رہی۔ ’رابطہ‘ 33 کروڑ روپے کے بجٹ سے بنی تھی جو باکس آفس پر صرف 25 کروڑ کا بزنس سمیٹ سکی۔ سمرن کنگنا کی فلم ’سمرن‘ بالی وڈ کی خراب پرفارمنس کی فلموں کے درمیان امید کی کرن سمجھی جا رہی تھی لیکن یہ بھی بالی وڈ کی فلاپ فلموں کا سلسلہ نہ توڑ سکی۔ ’سمرن‘ 30 کروڑ روپے کی لاگت سے بنائی گئی تھی جس کی کمائی 29 کروڑ روپے رہی۔ نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماریایپ ڈاؤن لوڈ کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں