42

رونکی کی نصف سنچری کی بدولت اسلام آباد نے کراچی کو 8 وکٹوں سے شکست دیدی

شارجہ: پاکستان سپر لیگ کے 15ویں میچ میں کراچی کنگز کی جانب سے دیے گئے 154 رنز ہدف کے تعاقب میں اسلام آباد کے جارحانہ آغاز کے بعد ایک وکٹ گرگئی۔

شارجہ کرکٹ اسٹیڈیم میں کھیلے جارہے میچ میں ہدف کے تعاقب میں اسلام آباد نے لیوک رونکی کی جارحانہ بلے بازی کی بدولت شاندار آغاز کیا ہے۔

رونکی 37 گیندوں پر 71 رنز بنانے کے بعد محمد عرفان کی گیند پر آؤٹ ہوگئے۔ یہ پی ایس ایل تھری کی تیز ترین نصف سنچری تھی۔
12 اوورز کے اختتام پر اسلام آباد یونائیٹڈ نے 109 رنز بنالیے تھے جبکہ اس کی صرف ایک ہی وکٹ گری تھی۔
اس سے قبل بابر اعظم اور خرم منظور کی شراکت کے باعث کراچی کنگز نے اسلام آباد یونائیٹڈ کے خلاف اپنے مقررہ 20 اوورز میں 153 رنز بنالیے۔
کراچی کنگز کا آغاز اچھا نہ تھا۔ اوپننگ بلے باز جو ڈینلی محمد سمیع کی سیدھی گیند سمجھنے سے قاصر رہے اور چار رنز بناکر بولڈ ہوگئے۔
تاہم اس کے بعد خرم منظور اور بابر اعظم کے درمیان 101 رنز کی شاندار شراکت قائم ہوئی۔ دونوں بلے بازوں نے آغاز میں محتاط انداز میں بیٹنگ کی تاہم بعد میں وکٹ کے چاروں طرف شاٹس لگاکر اسلام آباد کے بولرز کو پریشان کیا۔
51 کے انفرادی اسکور پر خرم منظور حسین طلعت کی گیند پر صاحبزادہ فرحان کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوگئے۔
اس کے بعد کولن انگرام کریز پر آئے تاہم بڑا شاٹ لگانے کے کوشش میں فہیم اشرف کی گیند پر وکٹ کیپر لیوک رونکی کے ہاتھوں آؤٹ ہوگئے۔
اختتامی اوورز میں جارحانہ بیٹنگ کی غرض سے بابر اعظم نے حسین طلعت کی گیند پر اونچا شاٹ لگایا تاہم آصف علی کو کیچ دے کر آؤٹ ہوگئے۔
روی بوپارا اختتامی اوورز میں کریز پر پہنچے اور تیزی سے رنز بنانے کی کوشش کی تاہم 18ویں اوور میں دوسرا رن بنانے کی کوشش میں رن آؤٹ ہوگئے۔

محمد رضوان نے اختتامی اوورز میں 9 گیندوں پر 21 رنز کی جارحانہ اننگز کھیل کر کراچی کنگز کے اسکور کو 150 رنز کے پار لگادیا۔
خیال رہے کہ اب تک شارجہ میں کھیلے گئے میچز میں اسپنرز حاوی رہے ہیں اور اور ٹیمز کی جانب سے چھوٹے رنز ہی بن پائے ہیں۔

اس سے قبل اسلام آباد یونائیٹڈ نے کراچی کنگز کے خلاف ٹاس جیت کر بیٹنگ کا فیصلہ کیا۔

کراچی کنگز آج اپنے اسٹار کھلاڑی آل راؤنڈر شاہد آفریدی کی خدمات سے محروم ہے جن کو انجری کے باعث ڈاکٹرز نے کچھ روز آرام کا مشورہ دیا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ڈاکٹرز کی جانب سے آرام کے مشورے کے بعد امکان ہے کہ شاہد آفریدی دو سے تین میچز میں اپنی ٹیم کی نمائندگی نہ کر پائیں۔

اسلام آباد یونائیٹڈ اور کراچی کنگز آج ایونٹ میں پہلی مرتبہ آمنا سامنا کررہی ہیں اور دونوں ٹیموں میں بیٹنگ اور بولنگ کے شعبوں کے بڑے بڑے نام موجود ہیں۔

کراچی کنگز کو ایونٹ میں کامیابی کا تسلسل برقرار رکھنے کا چیلنج درپیش ہوگا، عماد وسیم الیون اپنے 4 میچز میں 7 پوائنٹس کے ساتھ سرفہرست ہے جب کہ اسلام آباد یونائیٹڈ کو دو ناکامیوں کا سامنا کرنا پڑا ہے اور 4 میچز کھیل کر اس کے پاس 4 پوائنٹس ہیں۔
پاکستان سپر لیگ 3 کون سی ٹیم جیتے گی؟
کراچی کنگز
اسلام آباد یونائیٹڈ
کوئٹہ گلیڈی ایٹرز
پشاور زلمی
ملتان سلطان
لاہور قلندرز
ووٹ
دیں

اپنا تبصرہ بھیجیں