24

پاکستانیو !!! کچھ خبر ہے تمہیں؟ تحریر۔داؤد شاہد

وہ صدارتی آرڈینینس جو پاکستان کی خود مختاری پر لٹکتی ہوئی تلوار تھی جس کے بعد پاکستان امریکہ کی لونڈی اقوام متحدہ کی باجگزار ریاست بن جائے گا وہ آرڈینینس آج پارلیمنٹ سے منظور ہونے جا رہا ہے ۔امریکی دباؤ پر حکمران بھیگی بلی بن کر ان کی ہر بات مانتے چلے جا رہے ہیں۔ امریکی آقاؤں کو خوش کرنے کی یہ بھونڈی کوشش آج پایہ تکمیل کو پہنچنے جا رہی ہے۔۔
آج جماعۃ الدعوۃ اور حافظ سعید جو پاکستان کے محسن تھے ان کے پر کاٹنے اور ان کے بارے میں پاکستان کی اعلیٰ عدالتوں کے فیصلوں کو پارلیمنٹ میں جوتے کی نوک پر رکھا جائے گا پھر کہا جائے گا ادارے ایک دوسرے کا احترام نہیں کرتے۔۔۔
اور حکمرانو یاد رکھو یہ لوگ ہی رہ گئے تھے جو بس پاکستان کا سوچتے تھے جو اپنے آپ کو مٹا کر بھی سبز ہلالی پرچم کو بلند کرتے تھے آج تم اپنی حکومتوں اور کرسیوں کو بچانے کے لیے ان پرامن اور محسنان پاکستان کو ہی ریاست کے خلاف کھڑا ہونے پر مجبور کرنے جا رہے ہو؟
پاکستانی قوم یاد رکھو اگر تم آج جماعت الدعوۃ اور حافظ سعید کی وجہ سے چپ رہو گے تو کل کو یہی صدارتی آرڈینینس کیا کیا گل کھلائے گا ذرا اس کا بھی سوچ لینا۔۔۔۔
یہ پاکستان کو اغیار کے پاس بیچنے کی مکمل سازش ہے جس پر عوام پاکستان کو ڈٹ جانا چاہیے۔۔۔۔
“آخر جماعت الدعوہ ہے کیا چیز؟”
♨کیوں انڈین میڈیا،انڈین حکومت،انڈین فوج سمیت سب چینختے ہیں؟
♨کیوں امریکی گھر بیٹھے کانپتے ہیں؟
جماعت الدعوہ کو سمجھنے کے لئے دنیا کی ڈکشنری بدلنی ہوگی*۔ نا نا معاف کیجئیے گا بلکہ الٹ پڑھنی ہوگی،خرد کا نام جنوں اور جنوں کا نام خرد رکھنا ہو گا۔
 💫جیسے کوئی ٹخنوں سے اوپر شلوار کرے تو شدت پسند آگر کوئی پھٹی پینٹ پہنے تو ماڈریٹ ،
💫اگر کوئی ڈاڑھی سنت سمجھ کے رکھے تو شدت پسند آگر   کوئی انڈیا کے اداکار کی نقل میں رکھے تو فیشن۔
💫 اگر کوئی بالوں کی سیدھی مانگ نکالے تو شدت پسند آگر کوئی آدھے سر کے بال لمبے  باقی آدھے کی ٹنڈ کرا لے یا عجیب و غریب سائڈ کٹ کے نام اجڑا سٹائل بنا لے تو فیشن۔
💫کوئی اسلام کا سچا پکا پیروکار ہو اپنا حلیہ حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم جیسا بناۓ تو شدت پسند آگر عاصمہ جہانگیر انڈیا جا کے اورنج ڈریس پہن کر باقاعدہ ہاتھ بھی باندھے تو ماڈریٹ۔
دنیا نے جو ڈکشنری اُلٹ دی اچھائی کو برائی،برائی کو اچھائی کا نام دے دیا
جب سیاست میں قدم رکھا تو پھر پابندی لگا دی کہ یہ ملی مسلم لیگ دہشگردوں کی جماعت یہ الیکشن میں حصہ نہیں لے سکتی ۔اصل وجہ تو یہ تھی نواز شریف کو ڈر تھا اگر یہ جماعت الیکشن میں حصہ لے گی تو ن لیگ ہار جاے گی اسی وجہ سے ن لیگ نے الیکشن کیمشن کو ملی مسلم لیگ رجسٹرڈ نہ کرنے کا حکم دیا
کیا یہ پاکستان ہے جس میں حافظ سعید جیسے محب وطن لوگ آزاد نہیں رہ سکتے؟
جب پاکستان اور کشمیر کے لیے کچھ کرنے لگتے ہیں تو ان کو نظر بند کر دیا جاتا ہے اور کہا جاتا ہے کہ حافظ سعید دہشتگرد ہے
پاکستانیوں کیا  آپ کو حافظ سعید جیسا محب وطن لیڈر چاہیے یا پھر نواز شریف جیسا نااہل لیڈر چاہیے

اپنا تبصرہ بھیجیں