41

ہندی فلموں کا یہ مشہور ’ولن‘ تو آپ کو یاد ہو گا مگر یہ آج کل کدھر ہیں اور کیا کر رہے ہیں؟ ایسی تفصیلات سامنے آ گئیں کہ جان کر آپ بھی بے اختیار کہہ اٹھیں گے ”وقت انسان کو کہاں سے کہاں لے جاتا ہے“

نئی دہلی (رپورٹر) بالی ووڈ میں کام کرنا لاکھوں لوگوں کا خواب ہوتا ہے لیکن چند ہی ایسے لوگ ہوتے ہیں جنہیں یہ موقع میسر آئے۔ اس میں کوئی شک نہیں کہ ہیرو کا کردار ادا کرنے والے شخص کو شہرت ملتی ہے لیکن بالی ووڈ میں چند ایسے ولن بھی ہیں جنہوں نے خوب نام کمایا۔مکیش رشی بھی ایسے ہی فنکاروں میں سے ایک ہیں جنہوں نے فلموں میں منفی کرداروں کے ذریعے خوب شہرت حاصل کی۔ اپنے کیرئیر کی ابتدائی دنوں میں وہ نیوزی لینڈ میں ماڈلنگ بھی کرتے تھے اور بعد ازاں بھارت آئے اور بالی ووڈ میں اپنی قسمت آزمانے کا فیصلہ کیا۔انہوں نے کئی فلموں میں ولن کا کردار ادا کر کے خوب شہرت حاصل کی اور کئی سپرہٹ فلمیں دیں لیکن گزشتہ کچھ عرصے سے وہ منظرعام سے غائب ہیں کیونکہ آخری مرتبہ وہ 2012ءمیں اکشے کمار کی فلم ”کھلاڑی 786“ میں نظر آئے تھے اور اس کے بعد سے کسی اہم کردار میں نظر نہ آئے۔مکیش کے مداح اس وقت حیران پریشان رہ گئے جب انہیں ایک ٹی وی ڈرامے ”پرتھوی ولابھ“ میں دیکھا اور آپ بھی یہ جان کر حیران ہوں گے کہ 60 سالہ یہ اداکار بالی ووڈ میں کام نہ ملنے کے باعث تیلگو، کناڈا اور بھوج پوری فلموں میں ہی کام کرنے پر مجبور ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں