456

سعودی عرب اور پاکستان تعلقات کا مستقبل

کامران اکرم خان

حالیہ دنوں میں پاکستان اور سعودی عرب کے تعلقات درست کرنے کے لئیے بہت سے لوگ سامنے آئے خاص طور پر بھارتی آرمی آرمیچیف کے سعودی عرب دورے کے بعد پاکستانی اسٹیبلشمنٹ کی آنکھیں کھل گئیں اور عمران حکومت کو بھی سمجھایا گیا کہ سعودی عرب کوئی عام ملک نہیں پاکستان کے دکھ سکھ کا ساتھی ہے محض تین ارب ڈالر واپس کرکے ہم سعودیہ سے تعلقات تڑک کرکے توڑ نہیں سکتے یہ بہت گہرے اور دہائیوں پرانے تعلقات ہیں بات مکہ مدینہ کی سکیورٹی سے شروع ہوکر اسلامی ایٹم بم تک جاتی ہے اسی لئیے جنرل باجوہ اور عمران خان اگلے ماہ سے سعودیہ کے دوروں پر جانے کا ارادہ کرچکے ہیں تاکہ دونوں برادر ممالک مل کر دہشت گردی اور جارحیت پسندی کا مقابلہ کرسکیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں